وزیر اعلیٰ نے آزادی کا امرت مہوتسو سیمینار کا افتتاح کیا۔

وزیر اعلیٰ پشکر سنگھ دھامی نے پیر کو لال بہادر شاستری نیشنل اکیڈمی آف ایڈمنسٹریشن، مسوری میں منعقدہ امرت مہوتسو ڈیجیٹل نمائش اور آزادی کا امرت مہوتسو سیمینار کا افتتاح کیا۔ اس دوران انہوں نے لال بہادر شاستری کے مجسمے پر پھول چڑھائے اور احاطے میں 22 ریاستوں کی طرف سے لگائے گئے دستکاری کے اسٹالز کا دورہ کیا۔ پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ پشکر سنگھ دھامی نے کہا کہ لال بہادر شاستری نیشنل اکیڈمی آف ایڈمنسٹریشن میں عزت مآب وزیر اعظم جناب نریندر مودی جی کی رہنمائی اور ترغیب سے “مشن کرمایوگی” کے تحت اور حکومت ہند کی وزارت ثقافت کے ساتھ مل کر یہاں وسیع پیمانے پر بھرپور ہندوستانی ثقافت موجود ہے۔اس کی تشہیر کے لیے ڈیجیٹل نمائش کے ذریعے ایک اہم اقدام اٹھایا جا رہا ہے۔ تربیت حاصل کرنے والوں کو خوش قسمت قرار دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ آپ سال “آزادی کا امرت مہوتسو” میں تربیت حاصل کرنے کے بعد “مشن کرمایوگی” کے تحت اپنا کام شروع کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ آپ تمام افسران اگلے 25 سالوں میں اس ملک کی ترقی میں بڑا کردار ادا کریں گے۔ “مشن کرمایوگی” کا بنیادی مقصد ہندوستانی سرکاری ملازمین کو زیادہ تخلیقی، تخلیقی، سوچنے سمجھنے، اختراعی، زیادہ متحرک، ترقی پسند، توانائی بخش، قابل، شفاف اور ٹیکنالوجی کو مستقبل کے لیے تیار کرنا ہے۔ وزیر اعلیٰ پشکر سنگھ دھامی نے کہا کہ آج ہم ملک کی آزادی کے 75 سال کا جشن منا رہے ہیں، جسے محترم وزیر اعظم نے آزادی کے امرت مہوتسو کا نام دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ وقت نہ صرف ان بہادر قربانیوں کے سامنے جھکنے کا ہے جنہوں نے اس ملک کی آزادی کے لیے اپنی جانیں قربان کیں بلکہ ان کے خوابوں کو شرمندہ تعبیر کرنے کا بھی وقت ہے۔ انہوں نے تمام آزادی پسندوں کو سلام پیش کرتے ہوئے کہا کہ ہم اور ہماری آنے والی نسلیں ان کی جدوجہد پر ہمیشہ ان کی مقروض رہیں گی۔ انہوں نے کہا کہ آزادی کا یہ امرت کا تہوار نہ صرف ان کی قربانیوں کو یاد کرنے کا موقع ہے بلکہ ان کے خوابوں کو یاد کرکے نئے عزم کا اظہار کرنے کا بھی موقع ہے۔ انہوں نے تربیت حاصل کرنے والوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ آپ ہندوستان کے لوگوں کو اپنے فرض سے آگاہ کر کے اس ملک میں بڑی تبدیلی لا سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آپ سب کو اس ملک کے مختلف حصوں میں جا کر فرض کا احساس پھیلانا ہے، لوگوں میں احساس فرض کو بیدار کرنا ہے۔ ثمرات یا فوائد کی فکر کیے بغیر، فرض کے احساس، خدمت کے جذبے کے ساتھ کام کرنے سے ہی اندرونی سکون حاصل ہوتا ہے۔ اپنی ڈیوٹی دیانتداری سے کریں، کسی پھل کی امید لگائے بغیر، اس میں ایک احساس پوشیدہ ہے کہ اگر آپ پھل کی خواہش کو مرکز میں رکھ کر کوئی فرض ادا کریں گے تو کہیں نہ کہیں آپ پر کوئی ناپسندیدہ دباؤ ضرور آئے گا۔ سماجی مقصد کے حصول کے لیے دو اہم عوامل ہیں، اول قائدانہ صلاحیتیں اور دوم موثر انتظام۔ وزیر اعلیٰ پشکر سنگھ دھامی نے کہا کہ اگر ہم اپنی سناتن ثقافت اور ہندوستان کے قدیم طریقوں کا صحیح مطالعہ کریں تو ایسا کوئی مسئلہ نہیں ہے، جس کا حل ہمارے آباؤ اجداد نے تجویز نہ کیا ہو۔ ہماری بھرپور دولت کی بنیاد پر طے کی گئی پالیسیوں کی وجہ سے آج دنیا ہندوستان کی طرف امید بھری نگاہوں سے دیکھ رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ محترم وزیر اعظم کا یہ بھی بیان ہے کہ امرتکل کے اس دور میں ہمیں ریفارم، پرفارم، ٹرانسفارم کو اگلی سطح پر لے جانا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم جناب نریندر مودی کی قیادت میں ملک کے مختلف شعبوں کے کام کرنے کے انداز میں تبدیلی آئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج ہر اسکیم کو نچلی سطح پر لاگو کیا جارہا ہے اور اسکیموں کو ہر طبقہ کو ذہن میں رکھ کر چلایا جارہا ہے۔ حکومت کو آخری سرے تک پہنچانے کے لیے بہت سے کام کیے گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم اتراکھنڈ میں اچھی حکمرانی پر مسلسل توجہ مرکوز کر رہے ہیں اور عوامی فلاحی پروگراموں کو آگے بڑھا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میں آج بھی اپنے آپ کو طالب علم سمجھتا ہوں۔ چیف منسٹر شری پشکر سنگھ دھامی نے کہا کہ ہم نے سادگی، حل، تحلیل اور اطمینان کو اپنے طریقہ کار کا اصول بنایا ہے اور اس بنیادی منتر کی بنیاد پر عوامی مسائل کو حل کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مجھے امید ہے کہ آپ سبھی آنے والے وقت میں بھی سادگی، حل، تحلیل کے منتر کے ساتھ عوامی خدمت کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہم اتراکھنڈ کی پائیدار اور ہمہ جہتی ترقی کے ایک اختیاری قرارداد کے ساتھ آگے بڑھ رہے ہیں اور ہم یقینی طور پر اس عزم کو ایک مقررہ مدت میں ثابت کرکے دکھائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ جب ہماری ریاست اپنے 25ویں سال میں داخل ہوگی یعنی سلور جوبلی منائے گی تو یہ ریاست ملک کی بہترین حالت میں ہوگی۔ سکریٹری جناب گووند موہن نے اپنے خطاب میں کہا کہ موجودہ حالات کی ترقی کے ساتھ ساتھ ہمارا مقصد اپنے عظیم ہیروز کی قربانی کو یاد رکھنا بھی ہے۔ انہوں نے کہا کہ مختلف حالات کے باوجود ہمارے ملک نے ترقی کے نئے ریکارڈ قائم کئے ہیں۔ ہم نے جو کچھ حاصل کیا ہے وہ قابل ستائش ہے۔ انہوں نے اگلے 25 سالوں کو ہندوستان کا امرت دور قرار دیا۔ وزیر اعظم جناب نریندر مودی کے ویژن کے مطابق آزادی کے امرت مہوتسو کے تحت ملک میں 50,000 سے زیادہ پروگرام منعقد کیے گئے ہیں اور ہر 30 منٹ میں ایک پروگرام کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔